19 Comments

  1. ان ساری صورت حال کو دیکھتے ہوئے ۔۔عدالتوں کے چکر لگاتے رہو اور وکیلوں کی فیس دیتے رہیں۔
    بہت ہے جہاں کا۔مڈلہ ہو وہاں حل کریں اور جو بھاگ جائیں انکو پکڑ کے اسی عدالت میں لایا جائے۔جہاں کا مسلہ ہو۔

  2. Sir Saudia men es waqt Jo Pakistani fraud Kar rahe Hain wo ye hai ke
    Imran nami bunda logon ko rozgar deta phir 3 ya 4 mah baad Saudi bundon se threat karwata wo darate Hain ke tum kafeel se bahir ho ke kaam Kar rahe Thai main abhi police ko bulwata hon masom lag dar ke bhaag jate hain es waqt tak wo 100 se zayada logon se aisa Kar chuka aur wo koi time sheet nhi deta
    Mere Bhai ke sath BHI aisa hi Kia us ne hum ne 24000 ryal Lena hai jis pe wo pehle time maangta Raha ab openly keh Raha hai Jo Karna hai Kar lo nhi deta paise
    Agar uska koi qanooni hull hai to pls baeye

  3. السلام علیکم محترم عرفان خان صاحب آپ نے جتنی شرائط بتائیں ہیں بظاہر یہی لگتا ہے کہ ایسی رقم کو بھول جاؤ،،، ھا ھا
    البتہ سعودیہ کے متعلق دو تین باتیں ،،یہاں چک باؤنس ہوجائے تو بندا فورا جیل میں چلا جاتا ہے زیادہ لمبی چوڑی کارروائی نہیں ہوتی
    عدالت میں بھی چھ ماہ سے زیادہ عرصہ نہیں لگتا،،
    ہاں ایک مشکل ا جاتی ہے کہ وہ بندہ جس نے رقم دینی ہے وہ کہتا ہے میں تو جی سو روپیہ مہینہ دے سکتا تو اس کو10سال رقم لینے میں لگ جائیں گے
    البتہ سعودیہ میں وکیل بہت مہنگی ہیں 5 ہزار ریال مونگ پھلی کا دانہ،،،اسی لیے یہاں فری لانس ایجنٹ ہر عدالت کے باہر کھڑے بہت ملتے ہیں مگر ان کی قانونی کابلیت نہیں ہوتی
    ھاں کسی سے پاکستان سے وکیل سے عربی میں لکھوا کر لے آئے تو قدرے سستا چھوٹ جاتا ہے عدالت اس کو بھی تسلیم کر لیتی ہے

  4. Sir pakistan me ake jeweler ko gold sale kiya tha 10 lakh ka us ne 4 lakh diye or 6 lakh ka kaha k kal dun gha us k bad us ne kaha 15 din bad dun ga ab 4 months guzar ghy hain us ne paisy nahi diye hmary pas original avoidance majod hai police FIR nahi kr rhi roz ghr walon ko bula letiy hain wo jeweler ata hi nahi 2 avoidance thy jin me se ake unho me chura liya tha police k table se ab woi police waly kehty hain k dosra b lao laiken FIR nahi krty btayen keya kran?

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*